Twitter Blue users will soon be able to hide likes and subscriber figures ‏ٹویٹر بلیو صارفین جلد ہی لائیکس اور صارفین کے اعداد و شمار چھپاسکیں گے‏

‏ٹویٹر بلیو صارفین جلد ہی لائیکس اور صارفین کے اعداد و شمار چھپاسکیں گے‏

‏ٹویٹر جلد ہی مزید پرائیویسی سینٹرک فیچرز متعارف کرا سکتا ہے جو اس کے بلیو صارفین تک محدود ہیں۔‏

‏ٹویٹر بلیو صارفین جلد ہی لائیکس اور صارفین کے اعداد و شمار چھپاسکیں گے‏

‏بحران کے درمیان ، ایلون مسک کی ملکیت والے مائیکرو بلاگنگ پلیٹ فارم ٹویٹر جلد ہی مزید خصوصیات متعارف کرا سکتا ہے جو صرف اس کے بلیو صارفین تک محدود ہیں۔ رپورٹس کے مطابق ٹوئٹر بلیو پیڈ صارفین جلد لائیک بٹن چھپاسکیں گے اور ناظرین سے صارفین کی تعداد بھی چھپا سکیں گے۔‏

‏جب ایک ٹویٹر بلیو صارف لائک ٹیب چھپاتا ہے تو ، یہ صرف اس شخص کو نظر آئے گا۔ تاہم وہ اب بھی دوسرے صارفین کی پوسٹس پر لائیکس کی تعداد کو لائیک اور دیکھ سکیں گے۔ اسی طرح ، یہ ٹویٹر اے پی آئی سے لائیک ٹائم لائن کو بھی چھپائے گا ، جبکہ انفرادی لائکس اب بھی نظر آئیں گے۔‏

‏اسی طرح جب کوئی ٹوئٹر بلیو صارف صارفین کی تعداد چھپاتا ہے تو صرف وہ پروفائل پر صارفین کی فہرست دیکھ سکتے ہیں۔‏

‏بلیو ٹک، جو پہلے معروف شخصیات اور میڈیا برادری تک محدود تھا، اب ایک معاوضہ فیچر ہے۔ اگرچہ ایلون مسک کا دعویٰ ہے کہ اس سے ٹوئٹر پر چھپے ہوئے صارفین اور پوشیدہ لائکس جیسے فیچرز کے ساتھ نقل کو کم کیا جائے گا، لیکن اصلی اور جعلی اکاؤنٹ کے درمیان فرق کرنا مشکل ہوگا۔‏

‏حصول کے بعد سے ٹوئٹر پر ایس ایم ایس پر مبنی ٹو فیکٹر تصدیق جیسے بہت سے اہم فیچرز کو بلیو صارفین تک محدود کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے 2023 کے بعد سے ٹریفک میں بھی کمی آئی ہے اور لوگ ٹویٹر کی طرح متبادل مائیکروبلاگنگ پلیٹ فارم ز کی تلاش میں بھی ہیں۔‏

‏اس کے نتیجے میں انسٹاگرام کی جانب سے تھریڈز کی فوری کامیابی ہوئی ، جس نے اپنے باضابطہ اجراء کے چند ہی دنوں میں 100 ملین سے زیادہ سائن اپ دیکھے۔ دیگر معروف مائیکرو بلاگنگ پلیٹ فارم جیسے بلیوسکی اور ماسٹوڈن بھی پچھلے کچھ مہینوں میں پھل پھول رہے ہیں۔‏

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *