Nawaz Sharif, Asif Zardari Hold Crucial Geneva Meet to Decide For Pakistani Caretaker PM

‏نواز شریف اور آصف زرداری کے درمیان جنیوا میں اہم اجلاس، نگراں وزیراعظم کے نام کا فیصلہ‏

‏پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سربراہ اور پاکستان کے سابق وزیر اعظم نواز شریف نے گزشتہ ہفتے جنیوا میں پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے رہنما آصف علی زرداری کے ساتھ ایک اہم ملاقات کی جس میں ملک کے نئے نگراں وزیر اعظم کی تقرری پر تبادلہ خیال کیا گیا۔‏

‏اس بات چیت میں وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا نام بھی شامل تھا جو مسلم لیگ (ن) کے ساتھ قریبی تعلقات اور پنجاب پر توجہ مرکوز کرنے کی وجہ سے پیپلز پارٹی کے اندر تشویش کا باعث بن رہا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس کے دوران معروف کاروباری شخصیات سمیت متعدد ناموں کو حتمی شکل دی گئی اور یہ نام منظوری کے لیے چیف آف آرمی اسٹاف عاصم منیر کو پیش کیے جائیں گے۔‏

‏فوج کی منظوری کے بعد شہباز شریف حکومت نئے نگراں وزیراعظم کے حوالے سے باضابطہ اعلان کرے گی۔ مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی کے درمیان اختلافات کی قیاس آرائیوں کے باوجود دونوں جماعتوں کا کہنا ہے کہ وہ آئندہ انتخابات میں حصہ لیں گے۔‏

‏انتخابات کی تاریخوں کے بارے میں مختلف آراء ہیں۔ کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ سابق وزیر اعظم عمران خان کی گرفتاری کے وقت کو مدنظر رکھتے ہوئے اگلے 60 دنوں کے اندر انتخابات کرائے جانے چاہئیں۔ تاہم، دیگر کا کہنا ہے کہ حکومت 120 کی مردم شماری کے ساتھ انتخابات کے اعلان کے بعد 2023 دن مانگ رہی ہے۔‏

‏خیال رہے کہ موجودہ چیف جسٹس عمر عطا بندیال کی ریٹائرمنٹ کے بعد نواز شریف کی ستمبر میں وطن واپسی متوقع ہے۔ سیاسی منظر نامہ متحرک ہے اور ملک ان واقعات پر گہری نظر رکھے ہوئے ہے۔‏

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *